ہند۔امریکہ چیمبر آف کامرس، سی ایس آر فنڈ سے یو ایس ایڈ کے ترقیاتی پروگراموں میں مدد دے گا

 امریکی ایجنسی برائے بین الاقوامی ترقیات (یو ایس ایڈ) اور بھارت میں ہند۔امریکہ چیمبر آف کامرس (آئی اے سی سی) نے ہندوستان کے ترقی کے چیلنجوں کو مشترکہ طور پر حل کرنے کے لئے آج ایک مفاہمت نامے پر دستخط کئے۔

 جیسا کہ نو تشکیل شدہ شراکت داری کے تحت اتفاق کیا گیا، آئی اے سی سی کی رکن کمپنیاں اپنے سی ایس آر فنڈز کو مختلف شعبوں جیسے ماں اور بچہ کی صحت؛ تپ دق؛ ایچ آئی وی/ ایڈس؛ توانائی/ماحولیات اور جنگلات؛ پانی اور حفظان صحت، صنف اور خواتین کی بااختیارگی؛ اور امور نوجواناں سے متعلق یو ایس ایڈ/انڈیا کے پروگراموں کے ساتھ ضم کردیں گی۔ دونوں ادارے ایسی ایجادات اور ماڈلوں کی نشاندہی کرنے کے لئے ملکر کام کریں گے جن سے بھارت کی بڑی آبادی کے سب سے نچلے حصے کو فائدہ ہو، اور ترقیاتی پروگراموں کیلئے خارجی وسائل کو بھی بدعت اور ماڈلوں کی شناخت کرنے کے لئے بھی مل کر کام کرنا ہوگا جو بھارت میں بیس-پرامڈ آبادی کو فائدہ اٹھانے اور ترقیاتی پروگراموں کے لئے بیرونی وسائل میں اضافے کیلئے تعاون کریں گے۔

 معاہدے پر دستخط کرنے کے بعد یو ایس ایڈ/انڈیا کے مشن ڈائریکٹر مارک انتھونی وائٹ نے ایک پروگرام میں تقریر کرتے ہوئے کہا، ’’ آئی اے سی سی کے ساتھ اس شراکت داری کو باقاعدگی سے فروغ دینے پر مجھے فخر ہے. شراکت داریاں اور اتحاد ترقیاتی نتائج حاصل کرنے میں اہمیت رکھتے ہیں۔ اس معاہدے کے ذریعہ، ہم امریکی اور بھارتی نجی شعبے کو حکومت کے ساتھ فعال طور پر کام کرنے اور اپنا سرمایہ ڈال کر ہندوستان کی ترقی کے سفر میں اپنا کردار ادا کرنے اور موثر حل تلاش کرنے کے لئے وسیع تر موقع فراہم کررہے ہیں۔‘‘ 

 مزید پڑھیں